ایان علی کے بعد دوسری اداکارہ منی لانڈرنگ میں ملوث قرار

 

نیب نے اداکارہ صوفیہ مرزا کو اغوا کاری اور دھوکہ دہی کے بعد منی لانڈرنگ میں ملوث قرار دیا ہے۔

ایان علی کے بعد ایک اور اداکارہ منی لانڈرنگ کیس میں ملوث قرار پائی گئی ہیں۔ نیب کی جانب سے ڈی جی ایف آئی اے کو بھیجی جانے والی درخواست میں خوش بخت عرف صوفیہ مرزا کو ملزم قرار دیتے ہوئے کہا گیا کہ صوفیہ مرزا منی لونڈرنگ میں ملوث ہیں۔

نیب پہلے ہی اس معاملے پر نوٹس لے چکا ہے تاہم آیف آئی اے  بھی اس ضمن میں فوری طور پر کارروائی کرے۔ نیب کی جانب سے جاری درخواست میں واضح طور پر اداکارہ صوفیہ مرزا کے خلاف کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

واضح رہے متعدد ڈراموں میں کام کرنے والی صوفیہ مرزا دو سال قبل بھی فراڈ اور اغوا کاری میں بھی ملوث قرار پائی گئی تھیں۔

واضح رہے کہ ماڈل ایان علی 2015 میں اسلام آباد ائیرپورٹ سے دبئی پانچ لاکھ ڈالرز غیر قانونی طورپر لے جاتے ہوئے پکڑی گئیں تھیں، جس کے بعد انہیں تین ماہ جیل کی ہوا کھانی پڑی تھی، کیس کی سماعت کسٹم عدالت میں ہوئی اور عبوری چالان میں ملزمہ کو قصور وار قرار دیا گیا۔

ایان علی کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا تھا، بعد ازاں ایان علی نے لاہور ہائیکورٹ میں ضمانت کی درخواست دائر کی جس پر عدالت نے ان کے حق میں فیصلہ سنایا اور بیرونِ ملک جانے کی اجازت بھی دی تھی۔

 

Make Money with 1xBet
Show More
Back to top button