صوابی، ذوحہ کا سسرال ہی اس کا قاتل نکلا، ملزمان گرفتار

صوابی کے علاقے گندف میں ذوحہ نامی نئی نویلی دلہن کے قتل کا ڈراپ سین ہوگیا، مقتولہ کی ساس، دیور اور شوہر کے چچا ہی اس کے قاتل نکلے۔

صوابی پولیس کے مطابق 29 جون مقتولہ کے والد نے تھانے میں رپورٹ درج کراتے ہوئے کہا کہ ان کی سترہ اٹھارہ سالہ بیٹی ذوحہ کو اس کے سسرال نے زہر دے کر قتل کر دیا ہے۔

پولیس کا کہنا تھا کہ والد کی مدعیت میں اندراج مقدمہ کے بعد قتل کی تفتیش کیلئے ایک ٹیم تشکیل دی گئی اور نعش پوسٹ مارٹم کیلئے بھجوا دی گئی۔

پولیس کے مطابق مقتولہ کے جسم پر بظاہر تشدد کے نشانات نہیں تھے تاہم پوسٹ مارٹم رپورٹ سے مقتولہ کے والد کے دعوے کی تصدیق ہوئی جس کے بعد ملزمان محسن الرحمن ولد شمس الرحمن، عبدالرحیم ولد عبدالمنان ساکنان گندف کو گرفتار جبکہ مسماۃ بی بی خاتون  زوجہ شمس الرحمن نے عدالت سے عبوری ضمانت حاصل کرلی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ انویسٹی گیشن ٹیم  ہر زاویے سے تفتیش میں مصروف ہے اور جلد ہی اصل حقائق سامنے آجائیں گے۔

دوسری جانب مقتولہ کے والد اور اہل علاقہ نے عدلیہ سے اپیل کی ہے کہ ذوحہ کے قاتلوں کو عبرت ناک سزا دی جائے۔

واضح رہے کہ مقتولہ کی پانچ ماہ قبل شادی ہوئی تھی اور ان کے خاوند بسلسلہ ملازمت بیرون ملک مقیم ہیں۔

Make Money with 1xBet
Show More
Back to top button