راجن پورمیں سوتیلے باپ نے کمسن بیٹی سے زبردستی نکاح کرلیا

پنجاب کے ضلع راجن پور میں سوتیلے باپ نے اپنی کمسن بیٹی سے زبردستی نکاح کر لیا۔
چودہ سال کی متاثرہ لڑکی نے تھانہ سٹی پولیس کو دیئے بیان میں بتایا کہ جب وہ چھوٹی تھی تب اس کی والدہ کو طلاق ہو گئی اور والدہ نے اشرف سے دوسری شادی کر لی تھی۔
متاثرہ لڑکی نے بتایا کہ جب وہ بڑی ہوئی تو اس کے سوتیلے باپ نے 27 اگست کو زبردستی اس کے ساتھ نکاح کر لیا۔
کمسن لڑکی کا الزام ہے کہ سوتیلا باپ شادی سے پہلے اور بعد میں کئی بار اسے زیادتی کا نشانہ بنا چکا ہے۔ لڑکی کا یہ بھی کہنا ہے کہ شادی کرانے میں اس کی سگی ماں نے بھی سوتیلے باپ کی مدد کی۔
پولیس نے ملزم کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کر لیا ہے اور مقدمے میں والدہ کو بھی نامزد کیا گیا ہے۔
پولیس حکام کا کہنا ہےکہ لڑکی کو حفاظتی تحویل لے کر میڈیکل کرایا گیا ہے، میڈیکل رپورٹ آنے پر مزید قانونی کارروائی کی جائےگی۔

Show More
Back to top button