،اورکزئی میں غیرمقامی افراد کو فوری طور پرنوکریوں سے ہٹایا جائے،

 

سی جے محمد نواز

اورکزئی رائٹس مومنٹ نے مطالبہ کیا ہے ضلعے میں بھرتی کیے گئے نان لوکل سٹاف کو ہٹا کرمقامی بندوں کو بھرتی کیا جائے۔ گزشتہ روز ایک پریس کے دوران اورکزئی رائٹس موومنٹ کے چئیرمین عابد نعیم ، ملک مثل خان،  مشتاق حسین اور دیگر نے کہا کہ ضلع اورکزئی میں صحت کے شعبے میں کئی افراد بغیر اشتہار کے بھرتی ہوئے ہیں ان کو فورا اپنے عہدوں سے ہٹایا جائے اور ملوث افراد کے خلاف کاروائی کی جائے۔

اپنے علاقے کے مسائل پربات کرتے ہوئے کہا کہ حکام نے ضلع اور کزئی کے شعبہ صحت میں تبادلوں کا حکم جاری کیا ہے مگربعض افسران آج بھی انکے علاقے میں بیٹھے ہوئے ہیں۔

انہوں نے الزام لگایا کہ انکے علاقے میں صحت پرکام کرنے والی این جی او لوگوں کو صحت کی سہولیات دینے کے بجائے ان پرتجربے کرتے ہیں جو کہ غریب عوام کے ساتھ زیادتی ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ضلع اور کزئی میں کا م کرنے والی تمام این جی اوز کے دفاتر کوہاٹ و ھنگو کے بجائے غلجو کو منتقل کئے جائے کیونکہ یہ ادارے سفر پر وقت زیادہ ضا ئع کرتے ہیں اور کام پرصرف 30 منٹ لگا تے ہیں۔ اکثر سڑک کے نزدیک آبادی کے لیے کام ہو جاتا ہے اور مستحق لو گ رہ جاتے ہیں۔

انہوں نے دھمکی دی کہ اگر آج کے بعد کسی این جی او میں غیر مقامی شخص کو بھرتی کیا گیا تو اس کے خلاف احتجاج کریں گے اور اس کو کام کرنے نہیں دیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلی کے ہدایات کے باوجود اب تک اورکزئی موبائل سگنلز سے محروم ہیں جس کی وجہ سے ان کو مشکلات کا سامنا ہے لہذا انکے علاقے میں موبائل سگنلز بحال کئے جائے۔

پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے مطالبہ کیا کہ ضلع اورکزئی کے تجارتی راستے تجارت و سیاحوں کے لیے کھو ل دیئے جائیں۔

Show More
Back to top button